21 views
کیا فرماتے ہیں علمائے دین و مفتیان شرع متین مسئلہ ذیل کے بارے میں
کہ آج کے دور میں تمام مسلمانوں پر تبلیغی جماعت میں جانا فرضِ عین ہے یا پھر بعض مسلمانوں پر فرضِ عین ہے یا کسی پر بھی فرضِ عین نہیں ہے.


اور فرضِ عین کسے کہتے ہیں اسکی بھی وضاحت کردیں
asked Jan 27 in اسلامی عقائد by salman ansari

1 Answer

Ref. No. 39 / 0000

الجواب وباللہ التوفیق                                                                                                                                                        

بسم اللہ الرحمن الرحیم:۔ فرض عین کا کا مطلب ہے تمام مکلفین پر اس کو انجام دینا لازم ہو ایسا نہ ہو کہ بعض ادا کردیں تو سب کے ذمہ سے ساقط ہوجائے جیسا کہ فرض کفایہ میں ہوتا ہے۔ مروجہ تبلیغی جماعت میں جانا نہ تو فرض عین ہے اور نہ ہی فرض کفایہ ۔ فرض کہنا ہی غلو ہے؛ تاہم اپنی اصلاح کے لئے اس میں  نکلنا اور مسجد میں دن رات رہ کر اپنے کو عبادت کا عادی بنانا محبوب عمل ہے۔     

واللہ اعلم بالصواب

 

دارالافتاء

دارالعلوم وقف دیوبند

answered Feb 17 by Darul Ifta
...