52 views
Ref. No. 892

کیا فرماتے ہیں مفتیان کرام مسئلہ ذیل میں شریعت کیا کہتی ہے؟
 میں امریکہ میں رہتی ہوں، میری شادی  2006 ء میں ہوئی ۔ میرے شوہر نے مجھے بہت تنگ کیا ٹارچر کیا تو میں نے 2012ء میں کورٹ میں مقدمہ درج کرایا کہ مجھے میرے شوہر سے چھٹکارا دلایاجائے۔ میں اپنے شوہر  کے ساتھ نہیں رہنا چاہتی ، میں اپنے طور پر زندگی گذارنا چاہتی ہوں۔میاں بیوی کے دستخط لے کر کورٹ نے  5جون 2014 ء کو   طلاق کا فیصلہ سنایا ۔  شوہر  کے بھی دستخط اس پر موجود ہیں۔  سوال یہ ہے کہ کیا یہ طلاق واقع ہوئی یا نہیں یا ہم دونوں اب بھی میاں بیوی ہیں۔ بتول
asked Jan 1, 2015 in طلاق و تفریق by batool rizvi

1 Answer

Ref. No. 881 Alif

الجواب وباللہ التوفیق

بسم اللہ الرحمن الرحیم:۔  صورت مسئولہ میں  اگر فارم پر طلاق کی صراحت تھی اور  شوہر نےاس پر اپنی رضامندی سے  دستخط  کردیا ہے  اور  کورٹ نے  اسی کے مطابق فیصلہ سنایا ہے ، تو  عورت پر طلاق واقع ہوچکی ہے۔ واللہ اعلم بالصواب

 

دارالافتاء

دارالعلوم وقف دیوبند

answered Jan 5, 2015 by Darul Ifta
...