146 views
کیا فرماتے ہیں مفتیان دین درج ذیل مسلہر میں کہ ایک غریب شخص  نے قربانی کے لئے ایک بکرا خریدا وہ بکرا سخت بیمار ہوگیا  اور اس کے علاج کے لئے اس کے پاس پیسے نہیں ہیں تو اب وہ کیا کرے جبکہ بقرعید آنے میں دس دن ابھی  باقی ہیں۔(2) ایام قربانی میں خود بیمار ہوگیا  اور علاج کے لئے پیسے نہیں ہیں تو کیا اس جانور کو بیچ کر علاج اپنا کراسکتا ہے۔؟
asked Aug 5, 2019 in ذبیحہ / قربانی و عقیقہ by azhad1

1 Answer

Ref. No. 40/???

الجواب وباللہ التوفیق 

بسم اللہ الرحمن الرحیم:۔  ایام قربانی سے پہلے قربانی کی نیت سے خریدے ہوئے بکرے کو وہ غریب بیچ سکتا ہے لیکن اگر ایام قربانی میں ایسا ہوا ہے تو بکرے کی قربانی  کردے۔(2) ایام قربانی میں ہونے کی وجہ سے اس بکرے کی قربانی ہی واجب ہے۔ اس کو بیچنا درست نہیں ہے۔ (شامی ج4ص609)

واللہ اعلم بالصواب

 

دارالافتاء

دارالعلوم وقف دیوبند

 

answered Aug 5, 2019 by Darul Ifta
...