99 views
(۱۰)سوال:ابراہیم علیہ السلام رسول تھے یا نبی؟
فقط: والسلام
المستفتی: مولوی تسلیم الدین، ہزاری باغ
asked Mar 13, 2023 in اسلامی عقائد by azhad1

1 Answer

 

الجواب وباللّٰہ التوفیق:نبی اور رسول کی مشہور تعریف یہ ہے کہ: رسول خاص ہےاور نبی عام ہے، ہر رسول نبی ہوتا ہے، ہر نبی کا رسول ہونا ضروری نہیں ہے،(۱) اس کے علاوہ کلام پاک کے بہت سے مواقع میں بہت سے انبیاء کرام کو رسول کے خطاب سے منسوب کیا ہے، جس نے امت بنائی اور امت سازی سے کام لیا وہ رسول کی فہرست میں ہیں ان سب میں حضرت ابراہیم علیہ السلام بھی ہیں۔ (۲)

(۱) الرسول إنسان بعثہ اللّٰہ تعالیٰ إلی الخلق تبلیغ الأحکام وقد یشترط فیہ الکتاب بخلاف النبي فإنہ أعم۔ (علامہ سعد الدین تفتازاني، شرح العقائد النسفیۃ، ’’النوع الثاني: خبر الرسول المؤید بالمعجزۃ‘‘: ص: ۱۶)
(۲) {أَلَمْ یَأْتِھِمْ نَبَأُ الَّذِیْنَ مِنْ قَبْلِھِمْ قَوْمِ نَوْحٍ وَّعَادٍ وَّثَمُوْدَ ۵لا وَقَوْمِ إِبْرٰھِیْمَ وَأَصْحٰبِ مَدْیَنَ وَالْمُؤْتَفِکٰتِط أَتَتْھُمْ رُسُلُھُمْ بِالْبَیِّنٰتِج فَمَا کَانَ اللّٰہُ لِیَظْلِمَھُمْ وَلٰکِنْ کَانُوْٓا أَنْفُسَھُمْ یَظْلِمُوْنَ ہ۷۰} (سورۃ التوبۃ: ۷۰)

 فتاوی دارالعلوم وقف دیوبند جلد اول ص 195

answered Mar 13, 2023 by Darul Ifta
...